نواب آف جونا گڑھ نے امتیازفاران،ارمان صابراور ندیم احمد جمال کو خصوصی ایوارڈ سے نوازا

کراچی(بولونیوز)گزشتہ روز جونا گڑھ کلچرل اینڈ ویلفیئرسوسائٹی اور جوناگڑھ اسٹیٹ لائرز کونسل کے زیر اہتمام کراچی پریس کلب کے نو منتخب صدرمحمد امتیاز خان فاران اور جنرل سیکریٹری ارمان صابر کے اعزاز میں ایک عصرانہ کا اہتمام کیا گیا جس سے خطاب کرتے ہوئے نواب آف جونا گڑھ محمد جہانگیر خاں جی نے کہا کہ ہم اس تقریب میں معزز مہمانوں کا استقبال کرتے ہوئے انہیں اس امر کی یاد دہانی کراتے ہیں کہ اب ہم جونا گڑھ کا مقدمہ شدومد سے شروع کرنے کی مہم کا آغاز کرنے والے ہیں جس کے لئے ہمیں میڈیا کا جو ریاست کا ایک اہم ترین ستون ہے کی معاونت درکار ہے انہوں نے کہا کہ صدر ایوب کے بعد سے کسی بھی حکمران نے جونا گڑھ کے معاملے میں دلچسپی نہیں لی حالانکہ جونا گڑھ وہ واحد اسٹیٹ تھی جن سے سب سے پہلے پاکستان سے الحاق کا اعلان کیا تھا۔ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کراچی پریس کلب کے صدر محمد امتیاز خان فاران نے کہا کہ وہ نواب آف جونا گڑھ کی مہم کو خوش آمدید کہتے ہیں اور اس نیک مقصد کے لئے دامے درمے سخنے حاضر ہیں۔جنرل سیکریٹری ارمان صابر نے کہا کہ صحافت ریاست کا اہم ترین ستون ہے لیکن موجودہ حکومت بھی اس ستون کو گرانے کے درپے ہے۔ انہوں نے ریاست جونا گڑھ کے مسئلہ کو عالمی سطح پر اجاگر کرنے میں اپنی حمایت اور تعاون کی یقین دہانی کرائی۔تقریب میں نواب آف جونا گڑھ نے محمد امتیاز خاں جی فاران اور ارمان صابر کو خصوصی شیلڈ دیں جبکہ اس موقع پر انسانی حقوق کی پہلی نیوز ایجنسی ایچ آراین ڈبلیوکے چیف ایگزیکٹیو ندیم احمد جمال نے بھی خصوصی شرکت کی۔ایچ آراین ڈبلیو کی خدمات کے اعتراف میں نواب آف جونا گڑھ اور امتیاز خان فاران،ارمان صابر،روحانی شخصیت جنید باپو اور جوناگڑھ اسٹیٹ لائرز کونسل کے چیئرمین محمد فیروزصدیقی نے ندیم احمد جمال کو بھی خصوصی ایوارڈدیا۔ایچ آراین ڈبلیو نے نواب آف جونا گڑھ کی جانب سے ان کی مہم کو زیادہ سے زیادہ اجاگرکرنے کے لئے اپنے تعاون کا یقین دلایا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں