پنجاب میں پانی کمپنی تین ارب لگادیئے،صاف پانی نہ دے سکی

اسلام آباڈ(بولونیوز)سپریم کورٹ نے ریمارکس دیے ہیں کہ پنجاب کی 56 کمپنیوں کو قانون سے بالاتر رکھا گیا اور صاف پانی کمپنی تین ارب لگاکرایک بوند صاف پانی نہ دے سکی۔سپریم کورٹ میں پنجاب کی56کمپنیوں کےملازمین کی بھاری مراعات کے خلاف کیس کی سماعت ہوئی۔جسٹس عظمت سعید نے کہا کہ عدالتوں پراعتماد رکھیں کسی بے گناہ کو سزا نہیں ہوگی، جس نے کوئی جرم یاغلط کام کیا ہوا اس کیساتھ قانون کے مطابق سلوک ہوگا، دنیا میں کسی سرکاری افسر کو کمپنیوں میں تعینات نہیں کیا جاتا، حکومت نے کمپنیاں بنانا تھیں تو اشتہار دیکر بھرتیاں کرتی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں