برونائی میں پرسوں سے مکمل اسلامی قوانین کا نفاذ کردیاجائیگا

نیویارک(بولونیوز)اقوام متحدہ کی انسانی حقوق کی کمشنر مشیل باچلیٹ نے برونائی کی حکومت سے ہم جنس پرستوں کے لیے سزائےموت سے متعلق نئے قوانین پر عمل درآمد معطل کر دینے کا مطالبہ کیا ہے۔غیرملکی خبررساں ادارے نے بتایاکہ برونائی میں متعارف کرائے گئے ان نئے قوانین کے مطابق غیر ازدواجی جنسی رابطوں اور ہم جنس پرستی کے مرتکب افراد کو سنگ ساری کےذریعے موت کی سزائیں دی جائیں گی۔عالمی برادری کی جانب سےان نئےقوانین پر سخت تنقید کی جا رہی ہے۔ نصف ملین سے بھی کم کی مسلم اکثریتی آبادی والےملک برونائی نے اپنے ہاں تین اپریل بدھ کے دن سے نئے قوانین کے نفاذ کا اعلان کر رکھا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں