تقسیم زکوٰۃ کے لئے محکمہ زکوٰۃ وعشر اور اوقاف، نادرا اور سندھ بینک کے درمیان معاہدہ طے

کراچی ( ایچ آراین ڈبلیو) سندھ کے وزیر برائے زکوۃ وعشر اوقاف اور آبپاشی سہیل انور سیال نے کہا کہ بے نظیر معاونت کارڈ سے مستحقین زکوة کی مالی اعانت مزید شفاف طریقے سے عمل میں لائی جا سکے گی ہم تقسیم زکوٰۃ کے نظام کو آسان بنا رہے ہیں ۔ان خیالات کا اظہار صوبائی وزیر سہیل انور سیال نےمحکمہ زکوۃ و عشر ، نادرا اور سندھ بینک کے درمیان مستحقین کے لیے بینظیر معاونت کارڈ برائے گزارہ الاؤنس کی بائیو میٹرک تصدیق اور ایکٹیویشن کے حوالے سے ہونے والے معاہدے پر دستخط کی تقریب کے بعد میڈیا کے نمائندگان سے گفتگو کرتے ہوئے کیا ۔اس موقع پر رکن سندھ اسمبلی ہیر اسماعیل سوہو، ڈی جی نادرا ،سندھ بینک کے صدر اور اور محکمہ اوقاف اور زکوة و عشر کے عہدیداران موجود تھے۔ صوبائی وزیر سہیل انور سیال نے کہا کہ چیئرمین پاکستان پیپلزپارٹی بلاول بھٹو زرداری کی خصوصی ہدایت پر زکوۃ کی تقسیم کو مزید آسان اور شفاف بنایا جارہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ تقریبا ایک ارب چالیس کروڑ روپے سالانہ صوبے کے ایک لاکھ مستحقین زکوة کو گزارہ الاونس کی مد میں تقسیم کئے جائیں گے ۔یہ تقسیم نادرا کے بائیو میٹرک ویریفکیشن کے ذریعے عمل میں لائی جائے گی ۔ویریفکیشن پر ہونے والے تمام اخراجات حکومت سندھ ادا کرے گی۔اس ضمن میں وزیراعلی سندھ کے خصوصی احکامات کے تحت 50 لاکھ روپے سالانہ مختص کیے گئے ہیں جو کہ اس مد میں نادرا کو ادا کیے جائیں گے ۔ صوبائی وزیر سہیل انور سیال نے مزید کہا کہ تقسیم کے نئے طریقہ کار سے گزارہ الاؤنس کی رقم بینظیر معاونت کارڈ بمہ شناختی کارڈ سندھ بینک لے کر جائے گا جہاں ہرمستحق کی شناخت بائیومیٹرک مشین کے ذریعے کی جائے گی ۔اس عمل سے مستحقین زکوة کو دفاتر کے چکر نہیں لگانا پڑیں گے ۔ ایک سوال کے جواب میں سہیل انور سیال نے بتایا کہ ہر ایک سال کے بعد مستحقین کی دوبارہ بائیومیٹرک ویریفیکیشن کی جائے گی جو کہ شش ماہی چھ ہزار روپے ادا کی جائیگی ۔ صوبائی وزیر نے کہا کہ سندھ کے تمام اضلاع میں زکوة کونسل کی سفارشات پر عمل کرتے ہوئے مستحقین زکوة کا ڈیٹا اپ ڈیٹ کیا جائے گا ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں