شاہ رخ خان پرکروڑوں روپے پاکستان بھجوانے کا الزام

ممبئی(بولونیوز)سرحد کے دونوں جانب مشہور بالی ووڈ کنگ شاہ رخ خان ایک بار پھر ہندو شدت پسندوں کی تنقید کا نشانہ بن گئے، انتہاپسندوں کی جانب سے ان پر کروڑوں روپے پاکستان بھجوانے کا الزام لگایا جا رہا ہے۔سماجی رابطوں کی ویب سائٹس پر ایک پرانی ویڈیو وائرل ہو رہی ہے جس میں یہ دعویٰ کیا جارہا ہے کہ شاہ رخ خان نے بہاولپور ٹینکر حادثے کے متاثرین کے لیے 45 کروڑ روپے پاکستان بھجوائے۔ اس ویڈیو کے وائرل ہوتے ہی شاہ رخ خان سے محبت کا دعویٰ کرنے والے بھارتیوں نے کنگ خان کے خلاف محاذ کھول لیا۔سوشل میڈیا صارفین نے کنگ خان کو آڑے ہاتھوں لیتے ہوئے کہا پلوامہ حملے کے بعد جب امیتابھ بچن اور سلمان خان سمیت متعدد بالی ووڈ فنکار حملے میں مرنے والے جوانوں کی مدد کر رہے ہیں اسی وقت شاہ رخ خان بھارتی پیسے پاکستان بھجوا رہے ہیں۔ایک نجی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق سوشل میڈیا پر یہ بھی کہا جارہا ہے کہ شاہ رخ خان نے حملے میں ہلاک ہونے والوں کے لیے ہمدردی کے بول تک نہیں بولے، شاہ رخ خان جان بوجھ کر ہندوؤں کے جذبات کو ٹھیس پہنچاتے ہیں۔ کچھ لوگوں نے لکھا ہم ہندو اگر شاہ رخ خان کی فلمیں دیکھنا بند کردیں تو یہ 45 کروڑ کیا 45 روپے بھی پاکستان بھجوانے کے لائق نہیں رہے گا۔بھارتی پاکستان سے نفرت میں اتنے اندھے ہوگئے ہیں کہ انہیں یہ بھی نہیں معلوم کہ شاہ رخ خان کی جانب سے 45 کروڑ روپے پاکستان بھجوائے جانے کی ویڈیو ابھی کی نہیں بلکہ سوشل میڈیا پر گردش کرنے والی ویڈیو 2017 کی ہے اور اسے کروپ (کانٹ چھانٹ )کرکے اب وائرل کیاگیاہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں