موروپولیس کیخلاف دھرنا دینوالوں کیخلاف تھانے میں مقدمہ درج

مورو(بولونیوز)گذشتہ روزمورو پولیس کے خلاف قومی شاہراھ ٹول پلازہ کے مقام پراحتجاج کرکے دھرنا دینے والوں پر مورو درس تھانہ پردہشتگردی کےایکٹ پرپچاس سے زائد باگڑی برادری کے مردوں،عورتوں اورسیاسی سماجی رہنماؤں کے خلاف مقدمہ درج کرلیا-فصیلات کے مطابق درج کئے گئے مقدمہ میں جیئی سندھ محاذ جونیجوگروپ کے مرکزی رہبما کامریڈ ہاشم کھوسو، جسقم آریسرکے اشرف لغاری، عوامی ورکرز کے امیر لغاری، عوامی تحریک کے غلام فرید کلہوڑو، ایس یو پی کے جی ایم سابقی، مظہر چانڈیو، نور سندھی،شہزادو لوند، مزمل لغاری، شاہنوازسولنگی شامل ہیں-ایف آئی آر میں باگڑی برادری کے امرداس، امیرکمار، گومیداس، رانی، خانی، بیبہ، میراں، مزاوری، نصیباں، لچھماں باگڑی و دیگرشامل ہیں-یاد رہے ایف آئی آرمیں شامل لوگوں نے گذشتہ روزاحتجاج کے دوراں پرامن ڈیوٹی پر موجود پولیس افسراں اہلکارولیڈی پولیس پرپتھراؤکرکے زخمی اورگاڑیوں کے شیشے توڑدیئے تھے جوایک کھلی دہشتگردی ہے-ہم اپنے حقوق کی ا حتجا ج کررہے تھے تو اچانک پولیس نے ہمارے اوپرلاٹھی چارج اورآنسوں گئس کے شیل برسا دیئے اور ہمیں زخمی کردیا، قتل اور ظلم بھی ہمارہ ہوا ہے اور دہشتگردی کا مقدمہ بھی ہمارے اوپر کردیا گیا ہے انصاف کیا جائے-

اپنا تبصرہ بھیجیں