شامی وزیر کی بیٹی کی شادی پر 20 لاکھ ڈالر اڑا دیے گئے

دمشق (بولونیوز) ایک جانب جہاں دنیا میں غربت کے مارے کروڑوں لڑکیاں شادیوں سے محروم ہیں وہیں دوسری جانب ایسے بھی دولت مند ہیں جو اپنی بیٹی کی شادی پر کروڑوں اربوں ایک جھٹکے میں خرچ کردیتے ہیں۔  آج کل جنگ زدہ ملک شام میں ایک وزیر کی بیٹی کی دھوم ہر طرف مچی ہوئی ہے۔ شامی حکومت کے وزیر منصور عزام کی بیٹی سالی عزام کی شادی زین العابدین عباس کے ساتھ انجام پائی جس پر بیس لاکھ ڈالر اڑا دیے گئے۔ زین العابدین بھارت میں شامی حکومت کے سفیر ریاض عباس کا بیٹا ہے۔ یہ پُرتعیش تقریب دمشق کے ایک تفریحی مقام یعفور میں منعقد ہوئی۔تقریب میں شامی حکومت کے سینئر ذمے داروں کے ساتھ ساتھ بڑی کاروباری شخصیات نے شرکت کی۔اس شاہانہ تقریب پر 20 لاکھ ڈالر سے زیادہ کی رقم اڑا دی گئی۔ دلہن کے عروسی لباس کی قیمت ایک لاکھ امریکی ڈالر کے قریب تھی۔ یہ لباس لبنان کے معروف ڈیزائنر زہیر مراد نے تیار کیا۔ تقریب میں لبنان کے 6 فنکاروں، رقاصاؤں اور روسی طائفے نے اپنے فن کا مظاہرہ کیا۔ طعام اور مشروبات کا انتظام لبنان کے مہنگے ترین ریستورانوں کی جانب سے کیا گیا تھا۔ اس کے علاوہ 20 سے زیادہ اقسام کے کیوبا کے مہنگے ترین سیگار اور درآمد شدہ مشروبات بھی پیش کیے گئے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں