ایک بچے کی ماں ایتھلیٹ دنیا کی تیزترین خاتون بن گئی

دوحہ (بولونیوز) دوحہ میں جاری عالمی ایتھلیٹکس مقابلوں میں شادی شدہ ایک بچے کی ماں جمیکن خاتون نے دنیا کی تیز ترین خاتون ہونے کا اعزاز حاصل کرلیا۔ جمیکا سے تعلق رکھنے والی شیلی این فریزر نے عالمی مقابلوں میں سو میٹر کی دوڑ جیت کر دنیا کی تیز ترین خاتون کا اعزاز حاصل کر لیا۔فتح کے بعد شیلی فریزر کا کہنا تھا کہ بچے کی پیدائش کے بعد یہاں بطور عالمی چیمپیئن کھڑا ہونا ان کے لیے باعثِ فخر ہے۔ اس دوڑ میں 32 سالہ شیلی نے یہ فاصلہ 10.71 سیکنڈ میں طے کر کریئر کا آٹھواں عالمی اعزاز اپنے نام کیا۔فتح کے بعد اپنے بیٹے کو گود میں لیے ٹریک کا چکر لگاتی شیلی فریزر کا کہنا تھا کہ ’بچے کی پیدائش کے بعد یہاں بطور عالمی چیمپیئن کھڑا ہونا ان کے لیے باعثِ فخر ہے۔بی بی سی سپورٹس سے بات کرتے ہوئے انھوں نے کہا کہ ’بیٹے کی پیدائش کے بعد واپسی اور آج جیسی کارکردگی کے بعد میں پرامید ہوں کہ میں ایسی تمام خواتین کے لیے مثال بنوں گی جو خاندان کی بنیاد رکھنا چاہتی ہیں یا ایسا سوچ رہی ہیں۔ آپ سب کچھ بھی کر سکتی ہیں۔انھوں نے یہ فاصلہ 10.83 سیکنڈ میں طے کر کے نہ صرف نیا قومی ریکارڈ قائم کیا بلکہ وہ 36 برس میں ان عالمی مقابلوں میں سپرنٹ کے زمرے میں انفرادی طور پر کوئی بھی میڈل حاصل کرنے والی پہلی برطانوی خاتون بھی بن گئیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں