محرم میں سیکیورٹی انتظامات قابل ستائش ہیں، چیئرمین ایفروایشیا فورم نعیم صدیقی

کراچی (بولونیوز) ایفرو ایشیا فورم کے چئیرمین نعیم صدیقی نے کہا ہے کہ محرم کا مہینہ امن وانسانیت کے احترام کا درس دیتا ہے کربلا کا معرکہ حق پرستوں اور باطل قوتوں کے درمیان ایک فیصلہ کن جنگ تھی۔  مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم انتہا پر ہیں۔  بھارتی فوجی غنڈوں کے ہاتھوں انسانی حقوق کی بدترین پامالی نے اسی لاکھ سے زیادہ کشمیریوں تمام بنیادی حقوق سے محروم کررکھا ہے۔ عالمی برادری کو پینتیس روز گذرنے کے باوجود مقبوضہ وادی میں انسانیت سوز مظالم دکھائی نہیں دے رہے۔ پاکستانی قوم کو اتحاد و اتفاق کا مظاہرہ کرتے ہوئے رواداری کو فروغ دینا ہوگا اورکشمیری عوام کو بھارت کے جبر اور زبردستی کے قبضے سے نجات دلانے کیلیے حکومت پاکستان کوفیصلہ کن راستے کا انتخاب کرنا ہوگا۔ ان کا کہنا تھا کہ محرم میں ملک دشمنوں کی جانب سے دہشت گردی کے خدشات موجود ہوتے ہیں جن کی روک تھام کیلیے حکومت نے بڑے پیمانے پر سکیورٹی  کے فُول پروف انتظامات کیے ہیں، امن و امان یقینی بنانے کیلئے حکومت ، سکیورٹی ادارے، علماء و دیگر مکاتب فکر کے افراد جس جذبہ ملی اور قومی یکجہتی کے ساتھ کام کررہے ہیں وہ قابل تحسین ہے۔ ایفرو ایشیا فورم کے چئیر مین نعیم صدیقی نے کہا کہ آج کا پاکستان  افواج پاکستان اور عوام کی بے پناہ قربانیوں کی وجہ سے دہشت گردی اور فرقہ پرستی کی لعنت سے محفوظ ترقی کی جانب گامزن ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں