مقبوضہ کشمیر میں جلوس میں عزاداروں پر قابض فوج کا بدترین تشدد

سرینگر: (بولونیوز) مقبوضہ کشمیر میں محرم کے جلوسوں کے دوران عزاداروں اور فوجی دستوں میں جھڑپوں کے بعد کرفیو مزید سخت کردیا گیا۔  محرم کے پرامن جلوس کو بھارتی دستوں نے روکنے کی کوشش کی جس پر عزاداروں کی فوجیوں سے جھڑپیں شروع ہو گئیں جن میں سینکڑوں کشمیری زخمی ہوئے جبکہ درجنوں کو گرفتار کر لیا گیا۔بھارتی فورسز نے پیلٹ گنوں اور آنسو گیس کا استعمال بھی کیا۔ بھارتی فوجی دستے جلوس کے شرکا کو کسی صورت شہر میں نکلنے کی اجازت دینے کے لیے تیار نہ تھے۔ان جھڑپوں کے دوران کشمیریوں نے بھارتی فوجیوں پر پتھراؤ بھی کیا۔ ایک حکومتی اہکار نے اپنی شناخت ظاہر نہ کرنے کی شرط پر تصدیق کی کہ جھڑہوں کے دوران انڈین فوج کی جانب سے مسلسل آنسو گیس کے شیل اور پیلٹ گنوں سے فائرنگ کی جاتی رہی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں