سانحہ یکہ توت،پیپلزپارٹی اور پی ٹی آئی نے انتخابی مہم معطل کردی

اسلام آباد(بولونیوز) سانحہ یکہ توت پرپاکستان تحریک انصاف اورپاکستان پیپلزپارٹی نے اپنی انتخابی مہم معطل کردی ہیں۔تفصیلات کے مطابق پاکستان پیپلزپارٹی نے اے این پی کے رہنما ہارون بلور کی شہادت پر پنجاب اور کے پی کے میں انتخابی مہم ایک روز کیلئے منسوخ کردی ہے، ذرائع پیپلز پارٹی کا کہنا ہے کہ خیبرپختونخوا میں اے این پی ،پیپلزپارٹی اور دیگر پارٹیاں تحریک انصاف کے مد مقابل ہیں، اور ایسے میں عوامی نیشنل پارٹی کے جلسے میں خودکش دھماکا تحریک انصاف کیلئے انتخابات کی راہ ہموار کرنے کی کوشش ہے۔ایک نجی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق خودکش دھماکا دوسری سیاسی جماعتوں بالخصوص پیپلزپارٹی کیلئے پیغام ہے کہ وہ کے پی کے میں اپنی سیاسی سرگرمیاں محدود کردیں تاکہ تحریک انصاف کو کھل کر اپنی انتخابی مہم چلانے کا موقع مل سکے۔دوسری جانب پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے چودہ جولائی کو پشاور میں ہونے والے جلسے سیکیورٹی خدشات کے باعث ملتوی کر دیئے ہیں، پی ٹی آئی قیادت کے مطابق عمران خان نے انتخابی مہم کے سلسلہ میں مردان اور پشاور میں ہونے والے جلسے ملتوی کئے ہیں جبکہ جلسے کی نئی تاریخ کااعلان جلد کیاجائےگا۔ترجمان پی ٹی آئی کا کہنا تھا کہ عوامی نیشنل پارٹی کی کارنر میٹنگ پر حملہ نہایت سفاکانہ اور قابل مذمت ہے، ہارون بلور اوراے این پی کے دیگر کارکنان کی شہادتوں سے پورا ملک سوگوار ہے، پی ٹی آئی نے بلور فیملی اوراے این پی کی قیادت کےساتھ مکمل اظہار یکجہتی کا فیصلہ کیاہے اورتحریک انصاف بلور فیملی اور اے این پی کا غم بانٹے گی۔