محکمہ تعلیم کی عمارت پرنامعلوم افراد کاحملہ 10افراد جاں بحق

جلال آباد(بولونیوز) افغان شہرجلال آباد میں نامعلوم افراد کے ننگرہارصوبے کی محکمہ تعلیم کی عمارت پرحملے میں دس افرادہلاک اوردس زخمی ہوگئے ہیں،افغان سیکیورٹی اہلکاروں اورمسلح افراد میں جھڑپیں بھی ہوئیں ہیں۔تفصیلات کے مطابق حکام نے دوپہرکےبعد بتایاہے کہ حالات قابومیں آگئے ہیں تاہم انھوں نے 10افراد کی ہلاکت کی تصدیق کی ہے۔ حکام نے محکمہ تعلیم کی عمارت پر حملہ آوروں کی تعداد کی تصدیق نہیں کی ہے۔یاد رہے عینی شاہدین کے مطابق حملے کے وقت عمارت میں50افراد محصور ہوگئے تاہم حکام نے ان افراد کی تعدادکے بارے میں بھی تصدیق نہیں کی ہے۔ننگرہارکے گورنرکے ترجمان نے تصدیق کی ہے کہ محکمہ تعلیم کی عمارت میں نامعلوم افراد کی نامعلوم تعداد نے صبح 9:30بجے حملہ کیا اور فائرنگ شروع کردی۔ایک نجی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق نظامت تعلیم کے ترجمان نے جو کہ حملے کےوقت عمارت میں موجود نہیں تھے،بتایاکہ دہشت گردوں کے حملے میں ایک چوکیدار کی ہلاکت کی تصدیق کی ہے۔حملے کےبعد سیکیوریٹی فورسز جائے وقوعہ پرپہنچی اور علاقے کی ناکہ بندی کی، حملے کی جگہ اسپیشل فورسز بھی پہنچی اور تین گھنٹے تک ایمبولینسیں بھی عمارت کے باہر ہلاک یا زخمیوں کو اسپتال منتقل کرنے کے انتظار میں کھڑی رہیں۔