طلال چوہدری کیخلاف توہین عدالت کیس کا فیصلہ محفوظ

اسلام آباد(بولونیوز)سپریم کورٹ نے مسلم (ن) کے رہنما طلال چوہدری کے خلاف توہین عدالت کیس کا فیصلہ محفوظ کرلیا جسے سنانے کی کوئی تاریخ نہیں دی گئی ہے۔تفصیلات کے مطابق سپریم کورٹ میں سابق وزیر مملکت اور مسلم لیگ (ن) کے رہنما طلال چوہدری کے خلاف توہین عدالت کیس کی سماعت ہوئی۔ایک نجی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق طلال چوہدری کے وکیل کامران مرتضیٰ نے حتمی دلائل دیتے ہوئے کہا کہ فیصل رضا عابدی نے عدالت کے بارے میں کیا کچھ نہیں کہا ایک حضرت نے بھی عدلیہ کے بارے میں ریمارکس دیئے، ہماری استدعا ہے کہ عدالت تحمل کا مظاہرہ کرے۔یاد رہے جسٹس گلزاراحمد نے ریمارکس دیئے کہ پڑھے لکھے شخص پر زیادہ ذمہ داری ہوتی ہے۔واضح رہے استغاثہ کے وکیل نے مؤقف اپنایا کہ طلال چوہدری نے بیانات میں عدلیہ کو اسکینڈلائز کیا ، طلال چوہدری نے اپنے بیانات سے کبھی انکار نہیں کیا، آرٹیکل 19 توہین آمیز تقاریروں کی اجازت نہیں دیتا۔