بجلی،پانی پرسیاست کے بجائے اسے فوری فراہم کیا جائے،ٹی ایل پی

کراچی(بولونیوز)تحریک لبیک یا رسول اللہ سندھ اور کراچی کے رہنماؤں علامہ رضی حسینی نقشبندی،سکندر داؤد،محمد خرم رضوی نے ایک مشترکہ بیان میں رمضان المبارک کی آمد کے ساتھ ہی بجلی،پانی کی قلت کے بحران پر حکومتوں کی بے حسی اور اداروں کی غفلت کو شرمناک قرار دیا ہے اور کہا ہے کہ ہفتوں سے نصف سے زاٗید کراچی کے گنجان ترین علاقے بجلی اور پانی کی عدم فراہمی کے عذاب میں مبتلا ہیں،کے الیکٹرک غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ کی تاریخ پر تاریخ دے رہی ہے،واٹر بورڈ کے ایم ڈی ٹیلفون پرعوامی شکایت سننے کا میڈیا میں ڈرامہ کررہے ہیں جبکہ کھینجر جیل میں پانی کی سطح ڈیڈ لیول تک پہنچ چکی ہے اندرون سندھ زرعی پانی کی قلت کے باعث آبادگار فصلوں کی بوائی کے عمل سے محروم ہیں ٹی ایل پی کے رہنماؤں نے کہا کہ وفاقی اور صوبائی حکومیتیں نورا کشتی کے ذریعے بجلی اور پانی کے معاملے پرکراچی اوراندرون سندھ کے عوام کے بنیادی مسائل حل کرنے کے بجائے اس پرسیاست کرنے میں مصروف ہیں،رمضان المبارک میں بجلی اور پانی کے بحران پر قابو نہ پایا گیا تو کراچی اور اندرون سندھ میں امن وامان کی ضمانت کوئی نہیں دے سکتا ہے۔