امریکا میں پاکستانی سفارت کاروں پرسفری پابندی عائد کردی گئی

واشنگٹن(بولونیوز) امریکا میں پاکستانی سفارت کاروں پرسفری پابندی آج سے عائد کردی گئی۔تفصیلات کے مطابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے حال ہی میں تنبیہ کی تھی کہ اگرہمارے سفارتکاروں کو پاکستان میں آزاد نقل وحرکت کی اجازت نہ دی گئی توامریکا میں پاکستانی سفا ر ت کاروں کی نقل وحرکت محدود کی جاسکتی ہے۔یاد رہے کہ امریکی محکمہ خارجہ کی جانب سے یکم مئی سے پاکستانی سفارتکاروں کی نقل و حرکت پرپابندی کا فیصلہ کیا گیا جس میں بعدازاں 10 روز کی توسیع کی گئی جس کی مدت ختم ہونے کے بعد پاکستانی سفارتکاروں کی نقل و حرکت مشروط کردی۔ایک نجی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق امریکا کی جانب سے پاکستانی سفارت کاروں پر لگائی جانے والی سفری پابندی کے مطابق سفارت کار بغیر اجازت نامے کے 25 میل سے باہر نہیں جاسکیں گے اور اس سے زائد نقل و حرکت کے لیے انہیں اجازت نامہ سفر سے 5 روز قبل لینا ہوگا۔امریکی محکمہ خارجہ کی جانب سے پاکستانی سفارتکاروں پر پابندی کا اطلاق ان کے اہلخانہ تک بڑھا دیا گیا ہے۔واضح رہے کہ امریکا میں تعینات پاکستانی سفیر اعزاز چوہدری کا کہنا ہے کہ امریکی پابندیوں کے جواب میں پاکستان بھی ایسا قدم اٹھا سکتا ہے۔یاد رہے کہ حال ہی میں امریکی ملٹری اتاشی کرنل جوزف کی گاڑی کی ٹکر سے عتیق بیگ نامی شہری جاں بحق ہوگیا تھا جب کہ حادثے میں اس کا کزن بھی شدید زخمی ہوا۔