اقتدارکی ہوس،پی ٹی آئی اورپیپلزپارٹی کوجمہوری اقتدارسے دورکردیا

کراچی(بولونیوز) پاکستان مسلم لیگ(ن) سندھ کے نائب صدرعلی اکبرگجرنے کہا ہے کہ ملکی سیاست غیرسیاسی عناصرکے ہاتھوں کی طرف جا رہی ہے. اقتدار کی ہوس نے تحریک انصاف اورپیپلز پارٹی کی قیادت کو جمہوری اقدار سے دورکردیاہے. قائد میاں محمد نوازشریف کے خلاف بے بنیاد مقدمات کی آڑ میں جمہوریت کو یتیم کرنے کی تیاریاں عروج پرپہنچ چکی ہیں. الیکشن کمیشن سے لے کر ملک کے انتظامی امور تک پاکستان مسلم لیگ(ن) کی وفاقی حکومت کے دائرہ اختیار سے کھینچے جانے کا عمل تیز تر ہو رہا ہے. ملک میں تیزی سے ہونے والے یکطرفہ تبدیلیوں سے عوام پاکستانی کو مسلم لیگ (ن) سے دور رہنے کا پیغام دیا جارہا ہے. پاکستان مسلم لیگ(ن) کے صوبائی نائب صدر علی اکبرگجر تحریک اں ساف اور پیپلز پارٹی کے رہنماؤں کے خلاف دہشت گردی اور کرپشن کے مقدمات کے خاتمے کو دکھائی نہ دینے والی قوتوں کا عام پاکستانی شہری کے لئے پیغام قرار دیتے ہوئے کہا کہ قوم کو ایک بار پھر ذہنی طور پر تیار کیا جا رہا ہے کہ جمہوریت ان کے لئے فائدہ مند نہیں اور نہ ہی موجودہ جمہوری نظام عوام کے مفاد میں ہے اس انتہائی متعصبانہ سوچ کے ساتھ ملک میں ٹیسٹ ٹیوب سیاسی جماعتیں اور مصنوعی قیادت کو غیر جمہوری سیاست کی نرسری میں تیزی سے پروان چڑھانے کی کوشش کی جارہی ہے. پاکستان مسلم لیگ(ن) کی قیادت موجودہ انتقامی ا نتظام کا سب سے اہم نشانہ ہے جس کی وجہ پاکستان مسلم لیگ(ن) کے لئے زبردست عوامی پذیرائی ہے. علی اکبر گجر نے کہا کہ ملکی تاریخ میں غیر جمہوری قوتوں کے اثرات دوبارہ نمودار ہونا شروع ہوگئے ہیں اور پاکستان کا جمہوری نظام غیر جمہوری ہاتھوں میں جانے کے خدشات بہت زیادہ ہوتے جا رہے ہیں اس کے باوجود پاکستان مسلم لیگ(ن) کی قیادت اور کارکنوں کے حوصلے جوان ہیں ہمیں یقین ہے کہ پاکستان کا مقدر جمہوریت کے ساتھ وابستہ ہے اور جمہوری نظام ہی ملک و قوم کے مستقبل کے تحفظ کی ضمانت بن سکتا ہے.