مریم نواز کیلئے زمین کس سال خریدی عدالت کو آگاہ نہیں کیا گیا،جسٹس عظمت سعید

اسلام آباد(بولو نیوز) سپریم کورٹ میں پانامہ لیکس کیس کی سماعت کے دوران جسٹس عظمت سعید نے کہا ہے کہ مریم نواز کی کفالت کا معاملہ ابھی تک حل نہیں ہوا ، سپریم کورٹ میں پانامہ کیس کی سماعت آج بھی ہوئی ۔ جسٹس عظمت سعید نے دوران سماعت سوال کیا کہ مریم نواز کی کفالت کا معاملہ ابھی تک حل نہیں ہوا ، مریم نواز کیلئے زمین کس سال خریدی گئی اس بارے میں بھی عدالت کو آگاہ نہیں کیا گیا اور نہ ہی اس بارے میں بتایا گیا ہے کہ زمین کی خریداری کے عوض کتنی رقم ادا کی گئی ہے ۔ایک نجی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق انہوں نے کہا کہ ابھی تک عدالت کو اس بارے میں بھی نہیں بتایا گیا کہ مریم نواز کس کے زیر کفالت ہیں ۔ وکیل صفائی سلمان اعظم بٹ نے جوابی دلائل دیتے ہوئے کہا کہ وزیر اعظم میاں محمد نواز شریف نے یہ زمین اپنی بیٹی کو تحفے میں دی تھی ، یہ زمین 19 اپریل 2011 کو خریدی گئی تھی ۔ مریم نواز شریف 1992 میں اپنی شادی کے بعد سے اب تک وزیر اعظم محمد نواز شریف کی کفالت میں نہیں ہیں ۔ جسٹس عظمت سعید نے استفسار کیا کہ مریم نے رقم نواز شریف کو واپس کر دی ہے ، کیا تحفے میں ملنے والی رقم بیٹی نے والد کو زمین کی قیمت کی مد میں واپس کی ہے۔